Home / صحت / یہ چھلکے اور پتے جنہیں ہم فالتو سمجھ کر پھینک دیتے ہیں

یہ چھلکے اور پتے جنہیں ہم فالتو سمجھ کر پھینک دیتے ہیں

دنیا میں خوراک کی قلت خوراک نہ ہونے سے پیدا نہیں ہوتی ۔ بلکہ خوراک ضائع کرنے سے پیدا ہوتی ہے۔ دعوتوں او ر شادی وغیرہ میں کھانا ضائع کرنا ہمارے معاشرے کی ایک عام عادت ہے۔ اور بہت سا کھانا ہم کوکنگ کے دوران بھی فالتو سمجھ کر ضائع کردیتے ہیں۔ آپ کو ایسے دس کھانوں کے چھلکوں کا ذکر کریں گے ۔ جو عام طور پر پھینک دیے جاتے ہیں۔ جو اکثریت ا ن کے فائدے سے آگاہ نہیں ہوتے۔ ہم ان کی غذائی صلاحیتوں کے متعلق آپ کو بتائیں گے ۔ تاکہ آپ اس سے فائدہ اٹھا سکیں۔ کیلشیم ہمارے جسم کا ایک اہم منرل ہے۔ جس کی کمی صحت کئی برے اثرات پیدا کرتی ہے۔ اور انڈے کے چھلکے کیلشیم اور دوسرے منرلنز سے بھرپور غذا ہے۔ اور ایسے افراد جن کو کیلشیم کی کمی ہے وہ انڈوں کے چھلکوں کاپاؤڈر بنا کر اسے جوس یا کھانے وغیرہ میں شامل کرکے اپنی یہ کمی دنوں میں پوری کرسکتے ہیں۔

دوسری چیز ہے ۔ تربوز کا سخت سفید حصہ۔ تربوز ایک انتہائی مزیدار پھل ہے۔ جو بے شمار خوبیوں کا حامل ہے ۔اور اسے عام طور پر جب کاٹا جاتا ہے۔ تو اس کے چھلکے کے اندر والا سفید اور سخت حصہ ضائع کردیا جاتا ہے۔ حالانکہ یہ حصہ بھی کئی غذائی خوبیوں کاحامل ہے۔ اگر اس کو سرکے میں ڈال کر اس کا اچار بنا لیاجائے تو یہ ایک انتہائی مزیدار کھانا بن سکتا ہے۔ تیسری چیز ہے گوبھی کےپتے۔ گوبھی کے پتے عام طور پر پھینک دیے جاتے ہیں۔ حالانکہ گوبھی کے پتوں میں آنکھوں کی صحت کے لیے بیٹا کیروٹین ، آئر ن اور کئی وٹامنز اور منر لنز شامل ہوتے ہیں۔ جو ہمارے صحت کےلیے انتہائی مفید ہیں۔ گوبھی کےپتوں کا ساگ بنایا جاسکتا ہے۔ اسے سوپ میں استعمال کیا جاسکتا ہے۔ اس سے کئی اور کھانے بھی بنائے جاسکتےہیں۔ بجائے اس کے انہیں ضائع کردیا جائے۔

چوتھی چیز ہے گا جر کا چھلکا ۔ گاجر کا چھلکا وٹامن سی سے بھر پور غذا ہے۔ جو صحت پر کئی اچھے اثرات مرتب کرسکتا ہے۔ اور کئی میٹھے اور نمکین کھانے ایسے ہیں۔ جن میں گاجر کا چھلکا بھر پور ذائقہ پیدا کرنے کی صلاحیت رکھتاہے۔ پانچویں چیز ہے بند گوبھی کا سخت حصہ ۔ بند گوبھی کاٹتے وقت ا س کے اندر موجود سخت حصہ ایکسٹرا سمجھ کر ضائع کردیا جاتا ہے۔ اگر اسے اچھے طریقے سے پکا یا جائے تو یہ جہاں مزیدار اور دلچسپ ذائقہ فراہم کرے گا۔ اور وہاں کھانے کی کمی کو بھی پورا کرے گا۔ چھٹی چیز ہے کیلے کا چھلکا ۔ پوٹاشیم ، میگنیشیم اور کیلشیم جیسے اہم منرلنز اور کئی وٹامنز سے بھر پور کیلے کا چھلکا اگر اسے پکا کرکھایا جائے تو ہماری صحت کو کئی طریقوں سے فائدہ دے سکتا ہے۔ ساتویں چیز ہے لہسن کا چھلکا۔ لہسن کے چھلکے میں اینٹی آکسیڈ ینٹس خوبیاں شامل ہیں۔

اور مختلف ممالک میں شیف حضرات لہسن کے چھلکے سے ویجیٹیبل یخنی بناتے ہیں۔ جو جہاں صحت کے لیے مفید ہے۔ وہاں کھانوں کے ذائقے کو بھی دوبالا کردیتی ہے۔ آٹھویں چیز ہے اسٹا بری کےپتے ۔ اس کے پھل کے پتے اینٹی آکسیڈ ینٹس ، اینٹی انفلا مینٹری ، کارڈیو پروٹیکٹیو ایلیمنٹس کے ساتھ ہماری صحت کو بہت بیماریوں سے بچانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔ اور اگر انہیں خوراک میں روزانہ کی بنیاد پر استعمال کیا جائے تو کئی بیماریاں جسم میں سر نہ اٹھا سکیں۔ نویں چیز ہے امردو کے پتے۔ امرود کے پتوں کو فوائد اگر امرود بیچنے والوں کو پتہ ہوجائے تو امرود سے زیادہ مہنگے داموں فروخت ہوں۔ امرود کے پتے شوگر کے مریضوں کے لیے انتہائی فائدہ مند خورا ک ہے۔ خاص طور پر کھانے کے بعد ان پتوں کا قہوہ پیا جائے تو یہ کھانے میں شامل شوگر کو خ ون میں تیزی سے شامل ہونے سے روکتے ہیں۔ جس سے شوگر کو قابورکھنے میں مدد ملتی ہے۔ دسویں چیز ہے جامن کے پتے ۔ جامن کے پتے کئی خوبیوں کے حامل ہیں۔ اور شوگر کے مریضوں کےلیے جامن اور اس کے پتوں میں ادویاتی خوبیاں شامل ہیں۔ جو ٹائپ ٹو شوگر کے مریضوں کےلیے کسی اکسیر سے کم نہیں
ہمارا ہدف آپکو بہترین معاشرتی, تاریخی ,معلوماتی،اور اصلاحی تحریریں پیش کرنا ہے
جس میں آپ کا ایک شیئر بہت بڑا کردار بطور صدقه جاریہ ادا کرسکتا ہے. آئیں ہمارے ساتھ ساتھ آپ بھی اس کار خیر کا حصّه بننیں
مزید بہترین آرٹیکل پڑھنے کے لئے نیچے سکرول کریں۔ ↓↓↓۔

Check Also

شریانوں کی رکاوٹ کا علاج

جو انسان چل پھر نہ سکتا ہو۔ پنڈلی کی شریانوں میں کھنچاؤرہتاہو۔ پٹھے اکڑ گئے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *